پاکستان کے تیل کی ضرورت اب کون سااسلامی ملک پوری کرے گا؟بڑی خبر

اسلام آباد(ویب ڈیسک )پاکستان نے سعودی بلاک سے نکل کرایک نیامسلم بلاک تشکیل دینےکافیصلہ کرلیاہے۔وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی کے اوآئی سی کے اجلاس پرسعودی عرب کے اثرانداز ہونے کے بیانات کےبعد دونوں ممالک کے درمیان تلخیاں بڑھ گئی ہیں جس کے بعد سعودی عرب نے پاکستان سے ایک ارب ڈالر واپس مانگ لیے اور آنے والے دنوں میں

یہ بھی متوقع ہے کہ وہ پاکستان کودئیے گئے مزیددوارب ڈالرواپس مانگنے کاتقاضاکرے۔اس صورتحال میں پاکستان کوبڑی پریشانی کاسامناکرناپڑ سکتاہے لیکن چین نے پاکستان کواس پریشانی سے نکلنے کاحل دیاہے۔چین نے پاکستان کویقین دہانی کرائی ہے کہ سعودی عرب اورمتحدہ عرب امارات اگراپنے پیسے واپس مانگتے ہیں تواس صورت میں ہم آپ کی مددکریں گے۔چین اورپاکستان اب ایک ایسے مقام پرآگئے ہیں جہاں دونوں ممالک کامفادایک ہوچکاہے۔پاکستان نہ توچین کے خلاف جاکرکوئی پالیسی بناسکتاہے اورنہ ہی چین پاکستان کوسائیڈ لائن کرسکتاہے۔کیونکہ آنے والے دنوں میں چین کاسٹیٹ آف ملاکاسے راستہ بندہونے جا رہاہے جس کے بعد چین کوگوادرکی ضرورت پہلے سے زیادہ محسوس ہوگی۔چین چاہتاہے کہ مسلم امہ کوپاکستان لیڈ کرے۔جبکہ چین کی یہ خواہش ہے کہ چین وہ رول پلے کرے جوکبھی امریکہ کیاکرتاتھامسلم امہ کے لیے۔نئے بلاک کے لیے بہت جلداسلام آبادمیں اجلاس ہوگااوراس کے بعدا سکے اجلاس ترکی میں بھی ہوں گے۔سعودی عرب نے پاکستان کوادھارتیل دینابندکردیاہےجس کے بعد اب پاکستان کے تیل کے حوالے سے ایران سےمعاملات چل رہے ہیں۔دوسری جانب اس ساری صورتحال پر سینئر اینکر پرسن عمران ریاض خان بھی میدان میں آگئے اور ساری صورتحال پر اپنا مؤقف پیش کر دیا۔ سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے ایک پیغام میں عمران ریاض خان کا کہنا تھا کہ ’’ یقین مانے پاکستان جب سعودی عرب کے دباوں سے نکل گیا تو پھر کسی کے باپ کی بھی نہیں مانے گا،نیا پاکستان، خودمختار پاکستان ‘‘۔

Sharing is caring!

Comments are closed.